KCR Train partially back on Rail track in karachi

بشکریہ : آئن لائن

کراچی سرکلر ريلوے کی پہلی ٹرين دھابيجی اسٹيشن سے روانہ ہوگئی۔ ٹرين بن قاسم ۔ لانڈھی ۔ ملير۔ ڈرگ روڈ۔ کراچی کينٹ سے ہوتی ہوئی سٹی اسٹيشن پہنچی۔ مفت ٹکٹ کے باوجود کوئی مسافر سوار نہيں ہوا۔ دوسری ٹرين چند مسافروں کو ليکر کراچی سٹی سے پيپری روانہ ہوگئی۔

کراچی والوں کا انتظار ختم ہوگیا۔ سرکلر ریل کے افتتاح کے بعد اسے آج جمعہ 20 نومبر کو شہریوں کیلئے چلا دی گئی ہے۔

شيخ رشيد نے کرایہ 50 سے کم کرکے 30 روپے کرنے کا اعلان کيا مگر تقریب میں لگے لوکل ٹرین کراچی کی بحالی کے پینا فلیکس نے سوالات اٹھا دیئے۔ وفاقی وزیر ریلوے کا کہنا تھا کہ 14دسمبر سے مزيد ٹریک پر بھی ٹرین چلے گی۔ ٹرين کو اصل ٹریک پر لانے ميں ايک سال لگے گا۔

چودہ دسمبر سے مزید 14 کلو میٹر ٹریک پر بھی ریل گاڑی چلے گی۔

کراچی سرکلر ريلوے کا باقاعدہ آغاز سٹی اسٹيشن سے پپری اور دھابيجی سے سٹی اسٹيشن سے صبح 7 بجے ہونا تھا ، تاہم پہلے دن تاخیر کا سامنا رہا اور دونوں ٹرينيں صبح ساڑھے 8 بجے اپنی اپنی منزل کو پہنچیں۔

مسافروں کو آج مفت سفر کرنے کی سہولت فراہم کی گئی تھی۔ تاہم دونوں جانب سے مفت سفر کے باوجود ٹرينوں ميں مسافروں کی تعداد بہت کم رہی۔

Source link

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *