Motorcycle side mirror exempted law challenged in Sindh High court

سندھ ہائی کورٹ میں موٹرسائیکل کے سائیڈ میرر لگانے سے استثنیٰ کا قانون چیلنج کردیا گیا ہے۔

بدھ کو سندھ ہائیکورٹ میں موٹرسائیکل کے سائیڈ مرر سے متعلق درخواست کی سماعت جسٹس محمدعلی مظہرکی سربراہی میں2رکنی بینچ نےکی۔عدالت میں موٹرسائیکل مالکان کوسائیڈ میرر لگوانےسےاستثنیٰ  کاقانون چیلنج کردیا گیا۔عدالت نےسندھ حکومت،ڈی آئی جی ٹریفک اور دیگر کو نوٹس جاری کردیےاورعدالت نے فریقین سے تفصیلی جواب طلب کرلیا۔

درخواست گزارکےوکیل نے کہا کہ درخواست کی سماعت 1969میں قانون سازی کرکےسائیڈمیررلگانےسےاستثنیٰ قراردیاگیا، ہیلمٹ پہن کر موٹرسائیکل چلانےوالوں کواردگردنظرنہیں آتا،موٹرسائیکلوں کےسائیڈمیررنہ ہونےسےروزانہ حادثات رونماہوتےہیں اورموٹرسائیکل سواروں کی غلطی کی وجہ سےکئی افرادجان سےجاچکےہیں۔ درخواست گزارنےموقف اختیار کی کہ

موٹرسائیکل سواراپنی اوردوسروں کی زندگیاں خطرےمیں ڈال رہےہیں اورموٹرسائیکلوں کوسائیڈ میررسےاستثنیٰ قرار دینےکاقانون کالعدم قراردیاجائے۔

درخواست گزارکا کہنا تھا کہ موٹرسائیکلوں کوسائیڈ میررلگانے کا پابندکیا جائے اورپابندی پر عملدرآمد نہ کرنے والے موٹر سائیکل سواروں کے خلاف سخت کارروائی کی جائے۔

Source link

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *